HomeHistoryLast moments of Lal Masjid | لال مسجد آپریشن کے آخری لمحات...

Last moments of Lal Masjid | لال مسجد آپریشن کے آخری لمحات | Part 4

82 / 100

Last moments of Lal Masjid | لال مسجد آپریشن کے آخری لمحات | Part 4

Last moments of Lal Masjid | لال مسجد آپریشن کے آخری لمحات | Part 4

یہی وجہ تھی کہ القاعدہ کو خود اعلان جنگ کرنا پڑا۔ اسامہ بن لادن نے اپنے جنگجوؤں کو حکم دیا کہ وہ پاکستانی فورسز پر حملے کریں۔ اس کے بعد معصوم بچوں سے خودکش حملوں کا ایک ایسا سلسلہ شروع ہوا جس نے آنے والے دنوں میں پاکستان کو دنیا کا ایک خطرناک ترین ملک بنا دیا۔ ایک ایسا ملک جہاں فلسطین اور عراق سے بھی زیادہ خودکش حملے ہونے تھے۔

جولائی دوہزار سات میں اس آپریشن سائلنس سے پہلے پاکستان میں کل ملا کر بیالیس، فورٹی ٹو خودکش حملے ہوئے تھے۔ لیکن لال مسجد واقعے کے بعد صرف دوہزار سات کے آخر تک سینتالیس، فورٹی سیون خود کش حملے ہوئے۔ ان حملوں میں صرف چند ماہ میں ایک ہزار ایک سو اٹھاسی، الیون ہنڈرڈ ایٹی ایٹ عام لوگ مارے گئےاور تین ہزار سے زیادہ زخموں سے چور ہوئے۔

حتیٰ کہ پاک فوج کا ایلیٹ ایس ایس جی کمانڈو یونٹ جس نے مبینہ طور پرلال مسجد آپریشن میں حصہ لیا تھا وہ بھی محفوظ نہ رہ سکا۔ ستمبر دو ہزار سات میں تربیلا غازی میں ایک خود کش حملہ آور نے فوجی کینٹین میں خود کو دھماکے سے اڑا لیا۔ اس دھماکے میں پندرہ سے بیس کمانڈوز شہید اور درجنوں زخمی ہوئے۔

لال مسجد کا واقعہ پاکستان میں شدت پسندی میں اضافے کے ضمن میں سنگ میل کا درجہ رکھتا ہے۔ اس کے دو سال کے اندر اندر تحریک طالبان پاکستان نے پاکستان کے سرحدی صوبے اور فاٹا کے ایک حصے پر قبضہ کر کے اپنے تئیں شریعت نافذ کر دی۔

ان کا اثر اتنا بڑھا کہ دو ہزار نو تک وہ مالاکنڈ ڈویژن کے ضلع بونیر پر قابض ہو چکے تھے اور ان کے جنگجو اسلام آباد سے صرف ساٹھ میل کے فاصلے تک آ چکے تھے۔ دنیا میں پاکستان پر طالبان کے قبضے کی ہیڈلائنز لگنے لگیں تھیں۔ لال مسجد نے پاکستان اور چین کے تعلقات کو ہلا کر رکھ دیا تھا .

یہاں تک کہ پاک چین دوستی کی سب سے بڑی علامت شاہراہ ریشم، جسے اب قراقرم ہائی وے بھی کہتے ہیں وہ بھی خطرے میں پڑ گئی۔ اس کی حفاظت کے لیے پاکستان آرمی کی ایک کور کو سپلٹ کر کے صرف شاہراہ قراقرم کی حفاظت پر لگانا پڑا تا کہ پاک چین تجارتی راستہ بند نہ ہو سکے۔

اس واقعے نے جہاں یہ سب کچھ کیا وہیں اس نے جنرل مشرف کے بظاہر مضبوط ترین اقتدار کو بنیادوں سے ہلا دیا۔ واقعہ یہ تھا کہ انھی دنوں جب لال مسجد کا محاصرہ چل رہا تھا پاکستان میں مقامی تاریخ کی سب سے بڑی سول رائٹس موومنٹ چل رہی تھی۔ یہ ججز کی ریسٹوریشن، بحالی کی تحریک تھی۔

اس تحریک کا آغاز ایک انکار سے ہوا جو جنرل مشرف اور ان کے دو ساتھی جرنیلوں کے سامنے ایک بند کمرے میں ہوا تھا۔ اس انکار کی کہانی کیا تھی؟ لندن میں بینظیر بھٹو اور نوازشریف میں کیا تاریخی ایگریمنٹ ہوا؟ امریکہ نے پاکستان کی اگلی حکومت اور نئے آرمی چیف کی تقرری میں کیا کردار ادا کیا؟ یہ سب آپ کو دکھائیں گے لیکن ہسٹری آف پاکستان کی اگلی قسط میں۔

دوستو ہسٹری آف پاکستان کا شاندار سلسلہ جاری ہے۔پاکستان کی تاریخ پر زبردست ڈاکومنٹریز اردو زبان میں تمام ریفرنسیز کے ساتھ آپ کو صرف ڈی ایس جے میں دیکھنے کو ملیں گی۔

آپ ان وڈیوز کو شئیر اور لائیک بھی ضرور کیجئے۔ہسٹری آف پاکستان میں نوے کی دہائی دوستو ہنگامہ خیز تھی، اس کی تفصیلات جانے بغیر آپ اس وقت کے پاکستان کو نہیں سمجھ سکتے یہ تفصیلات یہ کہانی آپ یہاں دیکھ سکتے ہیں. کارگل کی جنگ کی کہانی یہاں جانئے اور یہاں دیکھئے کہ کیسے سلطان محمد فاتح نے بیظینٹائن رومن ایمپائر کو شکست فاش دی

یہ بھی پڑھیں۔۔واٹس ایپ اسٹیٹس سے ویڈیو کیسے ڈاؤن لوڈ کریں؟

RELATED ARTICLES

Leave a Reply

- Advertisment -

Most Popular

Recent Comments